14

صحافی خواجہ کاشف میر فنڈز منتقلی کے ثبوت سامنے لے آئے

گزشتہ دنوں آزاد کشمیر کے معروف صحافی خواجہ کاشف میر نے خبر دی تھی کہ عباس پور گریٹر واٹر سپلائی سکیم کے فنڈز حویلی منتقل کر دیئے گئے ہیں جس کے بعد کچھ سوشل میڈیا صارفین نے خبر کو بے بنیاد قرار دیتے ہوئے خواجہ کاشف میر کو ہدف تنقید بنایا تھا۔
جس پر صحافی خواجہ کاشف میر نے سوشل میڈیا پر ایک مکتوب کا عکس پیش کیا ہے۔
انہوں نے اپنے بیان میں کہا ہے کہ عباس پور سے وزیر حکومت یاسین گلشن کے بیٹوں سمیت کچھ نادان میرے خلاف سوشل میڈیا مہم شروع کیے ہوئے ہیں۔ الحمداللہ میرا پورا صحافتی کیرئیر میری تحقیقی صحافت کا گواہ ہے۔ عباس پور واٹر سپلائی اسکیم کے 55 ملین روپے کے فنڈ منتقل ہونے کا یہ آفیشل لیٹر قارئین کیلیے پیش خدمت ہے۔
عباس پور کے منصوبے کے فنڈز منتقلی کی تصدیق کے بعد یہ میری کردار کشی کرنے والے مجھ سے بیشک معافی نہ مانگیں لیکن اہلیان عباس پور سے انہیں معافی مانگنی چاہیئے۔ مجھے تو عباس پور کے لوگوں سے اس سے قبل ہمیشہ محبت اور احترام ملا اور میرا بھی یہاں کے لوگوں سے روح کا تعلق ہے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں